پاکستان

مولانا اگرپی ٹی آئی کے ساتھ بیٹھ سکتے ہیں توہمارے ساتھ کیوں نہیں، یوسف رضا گیلانی


  کراچی: چیئرمین سینیٹ یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ اگر مولانا فضل الرحمن  پی ٹی آئی کے ساتھ بیٹھ سکتے ہیں توہمارے ساتھ کیوں نہیں۔ 

قائم مقام صدرو چیئرمین سینیٹ نے بدھ کو بانی پاکستان کے مزارپرحاضری دی، پھولوں کی چادرچڑھائی اورفاتحہ خوانی کی،ان کے ہمراہ وزیراعلیٰ سندھ بھی موجود تھے، اس موقع پر میڈیا سے بات چیت میں ان کا کہنا تھا کہ ملک کے لیے ہم سب کو ایک ٹیبل پر بیٹھنا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ مولانا ہمارے پرانے دوست ہیں،انھیں جلد احساس ہوجائےگا، اگر وہ پی ٹی آئی کے ساتھ بیٹھ سکتے ہیں تو ہمارے ساتھ کیوں نہیں بیٹھ سکتے،پیپلز پارٹی مولانا کا احترام کرتی ہے،سینیٹ میں انہوں نے ہمیں سپورٹ کیا،وہ بھی ملتان کے ہی ہیں اورہم سے سرائیکی میں بات کرتے ہیں۔

یوسف رضاگیلانی کا کہنا تھا کہ عمران خان نے ایک کمیٹی بنائی تھی،مجھے یاد ہےاس وقت شاہ محمود قریشی بھی تھے اور لوگ بھی تھے، ہم نے اس وقت انہیں انتخابات کی تاریخ دے دی تھی، پھرانہوں نے کہا کہ ہم پوچھ کر بتائیں گے،میں نے اس وقت ان سے کہا تھا کہ آپ نے کے پی اورپنجاب اسمبلی توڑکرغلطی کی۔

چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ ہمارے ملک میں اگر قتل بھی ہوجائے توواحد راستہ مذاکرات کی میز ہے،بی بی شہید نے بھی کبھی مذاکرات کا راستہ نہیں چھوڑا۔

یوسف رضا گیلانی کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کے 65 فیصد نوجوانوں کو تنہا نہیں چھوڑیں گے،ہمارے لیڈر بلاول بھٹو بھی نوجوان ہیں،ملک میں بسنےوالے نوجوانوں کے پائیداراورشاندارمستقبل کے لیے ہرممکن اقدام کریں گے اورحکومت کے اچھےاقدامات کی حمایت کریں گے۔



Social Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے